Image result for monument valley
ہر چیز سے عیاں ہے،ہرشے میں نہاں ہے،خالِق کائنات، مالِک کائنات
عقلِ کُل،توانائی کُل، ہمہ جہت، ہمہ صِفت،خالِق کائنات، مالِک کائنات
آنکھیں کہ جِن سے میں دیکھا ہوں میری نہیں، عطائے خُداوندی ہے
  پاؤں کہ جِن سے میں چل تا ہوں میرے نہیں،عطائے خُدا وندی ہے
غرض یہ کہ میرے  وجود کا ذرہ  ذرہ   میرا  نہیں ،عطائے خُداوندی ہے
میرے خالِق میرے مالکِ میرے پروردگارانِ نعمتوں کا بے انتہا شُکریہ  


Friday, January 20, 2012

" ورائٹی اور فرقے "

منجانب فکرستان:بنی اسرائیل 72 گروہوں میں تقسیم ہو ئے/ میری اُمت 73گروہوں میں بٹے گی۔ترمذی 
ــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــ
کائناتی چیزوں پر نگاہ ڈالی جائے تو ہمیں ہر ایک میں ورائٹی نظر آتی ہے ، اور یوں محسوس  ہوتا ہے کہ جیسے ہر چیز میں ورائٹی کو تشکیل دینا فطرت کا خاصا ہے ۔ نباتات ہوں کہ حیوانات ،انسان ہوں کہ جمادات ، پھول ہوں کہ پتّے ،کیڑے مکوڑے ہوں کہ آبی مخلوق یہاں تک کہ کوئی بیماری ایسی نہیں ہے کہ جسکی اقسام نہ پائی جاتی ہوں ۔ جب ہم مذاہب پر نظر ڈالتے ہیں تو ہمیں اِسمیں بھی فطرت کی یہ کار گُذاری نظر آتی ہے ۔ کوئی مذہب ایسا نہیں ہے کہ جس میں فرقے نہ بنے ہوں ۔۔۔۔
اِسی طرح مذہب اسلام میں بھی کئی فرقے بنے ہیں ،اگر ورائٹی کو فطرت کا خاصا سمجھیں تو مذہب میں بھی فرقے ناگزیر لگتے ہیں ، اِس بارے میں اگر ترمذی کی اس حدیث کو صحیح  تسلیم کریں کہ " بلا شُبہ بنی اسرائیل 72 گروہوں میں تقسیم ہو ئے اور میری اُمت 73 گروہوں میں بٹے گی، ایک کے علاوہ سارے آگ میں جائیں گے۔۔۔ صحابہ رض نے عرض کی وہ کونسا گروہ ہے ؟ آپﷺ نے فرمایا جو اس دین پر ہونگے جس پر میں اور میرے صاحبہ ہیں۔ ترمذی" ۔ اس حدیث کو صحیح  تسلیم کریں تو ۔۔ اسلام میں فرقے ناگزیر ٹہرتے ہیں۔۔۔ اس لیے ۔۔جس طرح ہم ہر چیز کی ورائٹی کو تسلیم کرتے ہیں۔۔۔ اسی طرح ہمیں مذہب کی ورائٹی (فرقوں) کو بھی تسلیم کرنا چاہئے ۔۔۔
 ہر فرقہ کا یہ دعویٰ کہ اُنکا فرقہ آپﷺ کے دین پر قائم ہے۔ ان میں سے  کون سا فرقہ صحیح ہے  اِسکا فیصلہ صدیاں گُذارنے کے بعد بھی ہم طے  نہیں کر پا  رہے ہیں ۔۔۔ البتہ ایکدوسرے کا خون ضرور بہا رہے ہیں ۔۔۔ ہر فرقہ والے کے پاس اپنے اپنے دلائل کی کسوٹی ہے ۔۔۔اس لیے صحیح کون ہے کا فیصلہ خُدا پر چھوڑ کر تمام   فرقے اپنے اپنے فرقہ پر قائم رہتے ہوئے۔۔۔ دوسرے فرقوں کو اس طرح سے دل سے قُبول کریں کہ سب  مسلمان آپس میں باہم شِیروشکر ہوجائیں۔۔۔ تاکہ اغیاروں کی چالیں ناکام ہوں ۔۔۔ یہ کام وہی لوگ کرسکتے ہیں کہ جنہوں نے فرقے بنائے ہیں ۔میری مراد عُلماء کرام سے ہے کہ وہی یہ کام کرسکتے ہیں کوئی اور یہ کام نہیں کرسکتا ہے ۔۔لیکن فرقوں کو گلدستہ بنانے کیلئے علماء کو  اپنی اناؤں کو پُل صراط پر سے گُذارنا ہوگا۔۔۔ تب ہی عُلماء  فرقوں کا گُلدستہ بنانے میں کامیاب ہونگے ۔۔۔ اب اجازت دیں آپ کابُہت شُکریہ ۔۔۔یہ پوسٹ  حالیہ خانپور بم دھماکہ اور آبنائے ہرمز کی صورتِ حال کو پیشِ نظر رکھ کر لکھی گئی ہے ۔۔۔اسکی وجہ ذیل کے دونوں لنک دیکھیں۔ العربیہ/مہر نیوز۔ گو کہ ابھی پروپگنڈہ جنگ ہے۔۔ لیکن؟؟؟
میں یہ تو نہیں کہتا  میری سوچ سےاتفاق کریں٭میں تو اپنی سوچ آپ سے شئیر کر رہا ہوں ۔(ایم ۔ ڈی)
http://www.alarabiya.net/articles/2012/01/18/189079.html

http://www.mehrnews.com/ur/newsdetail.aspx?NewsID=1513753


2 comments:

  1. درپردہ حقيقت " ہم چناں ديگرے نيست " کے سوا کچھ نہيں

    ReplyDelete
  2. بھائی جان فارسی نہیں آتی ،شُکریہ پھر بھی حاضر ہے قُبول فرمائیں ،بُہت شُکریہ( ایم ۔ڈی )۔

    ReplyDelete